پاکستان اپنی مرضی کے مقام، وقت پر بھارت کو جواب دے گا: قومی سلامتی کمیٹی

0
39
پاکستان اپنی مرضی کے مقام، وقت پر بھارت کو جواب دے گا, قومی سلامتی کمیٹی
پاکستان اپنی مرضی کے مقام، وقت پر بھارت کو جواب دے گا, قومی سلامتی کمیٹی

اسلام آباد(بول نیوز) قومی سلامتی کمیٹی کے اجلاس کا اعلامیہ جاری، بھارتی دراندازی کے بعد آئندہ کے لائحہ عمل پر تفصیلی غور کیا گیا، پاکستانی قیادت نے بالاکوٹ میں بھاری جانی نقصان کو بھی حقائق کے برعکس قرار دے دیا۔

بھارت کی دراندازی کے حوالےسے وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت اعلیٰ سطح کا ہنگامی اجلاس ہوا۔

اجلاس میں وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے بھارتی طیاروں کی دراندازی کے بعد کی صورتحال پر بریفنگ دی جب عسکری قیادت نے کسی بھی صورتحال سے نمٹنے کے لیے اپنی تیاریوں سے آگاہ کیا۔

اجلاس کو پاک فضائیہ کے طیاروں کے فوری رسپانس کے حوالے سے بھی بریف کیا گیا۔

اجلاس میں حکومت نے بھارت کی طرف سے فضائی دراندازی کا معاملہ فوری طور پر عالمی سطح پر اٹھانے کا فیصلہ کیا ہے۔

وزیراعظم کی زیر صدارت اجلاس نے بھارتی دعووں کو مسترد کر دیا۔

وزیراعظم نے بروقت کارروائی پر پاک فضائیہ کو خراج تحسین پیش کیا۔ اعلامیہ کے مطابق پاکستانی قیادت نے بالاکوٹ میں بھاری جانی نقصان کو بھی حقائق کے برعکس قرار دے دیا۔

اعلامیہ کے مطابق قومی سلامتی کمیٹی اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ پاکستان اس حملے کا بھرپور جواب دے گا۔

جواب کے وقت اور مقام کا تعین پاکستان خود کرے گا۔

وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ پاکستان کے عوام اور مسلح افواج ہر طرح کی صورتحال کا سامنا کرنے کیلئے تیار رہیں۔

وزیراعظم نے کل بھی قومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس بلالیا۔

وزیراعظم نے 27 فروری کو نیشنل کمانڈ اتھارٹی کا اجلاس طلب کر لیا۔

وزیراعظم عمران خان نے بھارت کے غیر ذمہ دارانہ رویئے کو اجاگر کرنے کیلئے عالمی قیادت سے رابطوں کی ہدایت کر دی۔

وزیراعظم نے بھارتی جارحیت کی کوشش کے جواب میں پاک فضائیہ کی کارکردگی کو سراہا۔

قومی سلامتی کمیٹی اجلاس اعلامیہ کے مطابق جس مقام پر حملے کا دعوی کیا گیا وہ پوری دنیا کیلئے کھلا ہے۔ آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ، وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی، وزیر دفاع پرویز خٹک اور سینئر عسکری حکام بھی اجلاس میں شریک ہوئے۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here